Haal Ainda Dekhya Tha Tujhe

Ghazal
Haal Ainda Dekhya Tha Tujhe
Chho’d jaae ga batya tha tujhe

Tera banta tha keh tu dushman ho
Apne hatho se khelaya tha tujhe

Teri gali se mujhe yaad aya
Kitne taan’o se bachaya tha tujhe

Haal ainda dekhya tha tujhe
Chho’d jaae ga batya tha tujhe
غزل
حالِ آئندہ دیکھایا تھا تجھے
چھوڑ جائے گا بتایا تھا تجھے

تیرا بنتا تھا کہ تو دشمن ہو
اپنے ہاتھوں سے کھلایا تھا تجھے

تیری گالی سے مجھے یاد آیا
کتنے طعنوں سے بچایا تھا تجھے

حالِ آئندہ دیکھایا تھا تجھے
چھوڑ جائے گا بتایا تھا تجھے

اپنا تبصرہ بھیجیں