Khud Ko Jeene Ki Tasalli Mein| Urdu Ghazal

Khud Ko Jeene Ki Tasalli Mein| Urdu Ghazal

Khud Ko Jeene Ki Tasalli Mein Bahane Nahi Deta
Ab teri yad bhi aaye tou mein aane nahi deta

Gham se kehta hoon ke aaw tumhein jane nahi dunga
Aur woh aajaye tou phir usko mein jane nahi deta

Yeh tera zarf hai tou lout ke aaya hi nahi
Yeh mera zarf hai phir bhi tujhe tane nahi deta

Mein bhi zakhmon ki numaish mein khara hoon lekin
Rooh ke zakham koi mujhko dikhane nahi deta

Khud ko jeene ki tasalli mein bahane nahi deta
Ab teri yad bhi aaye tou mein aane nahi deta
غزل
خود کو جینے کی تسلی میں بہانے نہیں دیتا
اب تیری یاد بھی آئے تو میں آنے نہیں دیتا

غم سے کہتا ہوں کے آو تمھیں جانے نہیں دوں گا
اور وہ آجائے تو پھر اسکو میں جانے نہیں دیتا

یہ تیرا ظرف ہے تو لوٹ کے آیا ہی نہیں
یہ میرا ظرف ہے پھر بھی تجھے طعنے نہیں دیتا

میں بھی زخموں کی نمائش میں کھڑا ہوں لیکن
روح کے زخم کوئی مجھکو دکھانے نہیں دیتا

خود کو جینے کی تسلی میں بہانے نہیں دیتا
اب تیری یاد بھی آئے تو میں آنے نہیں دیتا

اپنا تبصرہ بھیجیں