Dasht-E-Be Nakheel Mein

Dasht-E-Be Nakheel Mein

Dasht-E-Be Nakheel Mein
Baad be lihaz ne

Aisi khaak urrai hai
Kuch bhi sujhta nahi
Hausalon ka saibaan
Raston ke darmiyan
Kis tarah ujarr gaya
Kon kab bicharr gaya
Koi puchta nahi
Fasl-e-itibaar mein
Aatish-e-ghobar se
Khema dua jala
Daman-e-wafa jala
Kis buri tarah jala
Phir bhi zindagi ka sath hai keh chutta nahi
Kuch bhi sujhta nahi
Koi puchta nahi
Aur zindagi ka sath hai keh chutta nahi
Dasht-ebe nakheel mein
Baad be lihaz ne
نظم
دشت بے نخیل میں
باد بے لحاظ نے
ایسی خاک اڑائی ہے
کچھ بھی سوجھتا نہیں
حوصلوں کا سائبان
راستوں کے درمیان
کس طرح اجڑ گیا
کون کب بچھڑگیا
کوئی پوچھتا نہیں
فصل اعتبار میں
آتش غبار سے
خیمہ دعا جلا
دامن وفا جلا
کس بری طرح جلا
پھر بھی زندگی کا ساتھ ہے کہ چھوٹتا نہیں
کچھ بھی سوجھتا نہیں
کوئی پوچھتا نہیں
اور زندگی کا ساتھ ہے کہ چھوٹتا نہیں
دشت بے نخیل میں
باد بے لحاظ نے

اپنا تبصرہ بھیجیں