Yeh Ab Khula Keh Koi Bhi Manzar Mera Na Tha

Yeh Ab Khula Keh Koi Bhi Manzar Mera Na Tha

Yeh Ab Khula Keh Koi Bhi Manzar Mera Na Tha
Mein jis mein reh rha tha wohi ghar mera na tha

Mein jis ko ek umer sambhalay phira kia
Mitti bata rahi hai wo pikar mera na tha

Mooaj howay sheher muqadar jawab day
Darya mere na thay keh samandar mera na tha

Phir bhi tou sangaar kia ja raha hoon mein
Kehte hain naam tak sar mohzar mera na tha

Sub log apne apne qabelon ke sath thay
Ek main tha keh koi bhi lashkar mera na tha

Yeh ab khula keh koi bhi manzar mera na tha
Mein jis mein reh rha tha wohi ghar mera na tha
غزل
یہ اب کھلا کہ کوئی بھی منظر مرا نہ تھا
میں جس میں رہ رہا تھا وہی گھر مرا نہ تھا

میں جس کو ایک عمر سنبھالے پھرا کیا
مٹی بتا رہی ہے وہ پیکر مرا نہ تھا

موج ہوائے شہر ِ مقدر جواب دے
دریا مرے نہ تھے کہ سمندر مرا نہ تھا

پھر بھی تو سنگسار کیا جا رہا ہوں میں
کہتے ہیں نام تک سر محضر مرا نہ تھا

سب لوگ اپنے اپنے قبیلوں کے ساتھ تھے
اک میں ہی تھا کہ کوئی بھی لشکر مرا نہ تھا

یہ اب کھلا کہ کوئی بھی منظر مرا نہ تھا
میں جس میں رہ رہا تھا وہی گھر مرا نہ تھ

اپنا تبصرہ بھیجیں