Kuch Bhi Acha Nahi Laga Tere Baad| Afkar Alvi

Kuch Bhi Acha Nahi Laga Tere Baad| Afkar Alvi

Kuch Bhi Acha Nahi Laga Tere Baad
Mein bahut be maza raha tere baad

Sadqe khairat rooze aur namaz
Mein ne kya kya nahi kiya tere baad

Rone se gham zaeef hota hai
Aur phir jitna mein hansa tere baad

Mein ne logon se milna chorr diya
Kehta bhi tou mein kehta kya tere baad

Kya ho jo tawaqqa totti hai
Tajurba tou mujhe ho tere baad

Mein woh pehla nahi raha afkar
Mein woh pehla nahi raha tere baad

Kuch bhi acha nahi laga tere baad
Mein bahut be maza raha tere baad
غزل
کچھ بھی اچھا نہیں لگا تیرے بعد
میں بہت بے مزا رہا تیرے بعد

صدقے خیرات روزے اور نماز
میں نے کیا کیا نہیں کیا تیرے بعد

رونے سے غم ضعیف ہوتا ہے
اور پھر جتنا میں ہنسا تیرے بعد

میں نےلوگوں سے ملنا چھوڑ دیا
کہتا بھی تو میں کہتا کیا تیرے بعد

کیا ہو جو توقع ٹوٹی ہے
تجربہ تو مجھے ہو تیرے بعد

میں وہ پہلا نہیں رہا افکار
میں وہ پہلا نہیں رہا تیرے بعد

کچھ بھی اچھا نہیں لگا تیرے بعد
میں بہت بے مزا رہا تیرے بعد

اپنا تبصرہ بھیجیں