Hum Mardon Mein Yahi Kharabi Hai Jigra

Hum Mardon Mein Yahi Kharabi Hai Jigra

Hum Mardon Mein Yahi Kharabi Hai Jigra
Larki kisi ke liye roti hai

Hum samjhte hai hamari liye ro rahi hai
Hamein dekh ke mouh phair leti hai
Hamein lagta hai sharma gayi hai

Kisi ki dooli mein beth jaye tou soch kar marte rehte hain
Keh pata nayi hamari baghair kaisay ji rahi hogi

Ghalati hamari hai badshad
Hum marne se pehle un peh mar jate hain

Hum mardon mein yahi kharabi hai jigra
Larki kisi ke liye roti hai
نظم
ہم مردوں میں یہی خرابی ہے جگرا
لڑکی کسی کے لیے روتی ہے

ہم سمجھتے ہے ہمارے لئے رو رہی ہے
ہمیں دیکھ کے منہ پھیر لیتی ہے
ہمیں لگتا ہے شرما گئی ہے

کسی کی ڈولی میں بیٹھ جائے تو سوچ کر مرتے رہتے ہیں
کہ پتا نئی ہمارے بغیر کیسے جی رہی ہوگی

غلطی ہماری ہے بادشاہ
ہم مارنے سے پہلے اُن پہ مرجاتے ہیں

ہم مردوں میں یہی خرابی ہے جگرا
لڑکی کسی کے لیے روتی ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں