Hasil E Kun Hai Yeh Jahaan E Kharab

شاعر:جون ایلیا

اصل کن ہے یہ جہان خراب

یہی ممکن تھا اتنی  عجلت میں

پھر بنایا خدا نے آدم

اپنی صورت پہ ایسی صورت میں

اور پھر آدمی نے غور کیا

چھپکلی کی لطیف صنعت میں

اے خدا( جو کہیں نہی موجود)

کیا لکھا ہے ہماری قسمت میں

Hasil-E-Kun Hai Yeh Jahaan-E-Kharab

Yehi mumkintha itni ujlat mein

Phir bnaya khuda ne aadam

Apni surat pe aisi surat mein

Aur phir admi ne ghor kiya

Chipkli ki lateef sanat mein

Ay khuda(jo kahi nahi mojod)

Kya likha hai hmari qismat mein

اپنا تبصرہ بھیجیں