Bin-Bass Ki Ek Shaam

بن بس کےاک شام
یہ آخری ساعت شام کی ہے
یہ شام جو ہے مہجوری کی 
یہ شام اپنوں سے دوری کی 
اس شام افق کے ہونٹوں پر 
جو لالی ہے زہریلی ہے 
اس شام نے میری آنکھوں سے 
صہبائے طرب سب پی لی ہے 
یہ شام غضب تنہائی کی 
پت جھڑ کی ہوا برفیلی ہے 
اس شام کی رنگت پیلی ہے 
اس شام فقط آواز تری 
کچھ ایسے سنائی دیتی ہے 
آواز دکھائی دیتی ہے 
یہ آخری ساعت شام کی ہے 
یہ شام بھی تیرے نام کی ہے
Bin-Bass Ki Ek Shaam
ye aakhiri saat sham ki hai 
ye sham jo hai mahjuri ki
ye sham apnon se duri ki
is sham ufuq ke honton par 
jo lali hai zahrili hai 
is sham ne meri aankhon se 
sahba-e-tarab sab pi li hai 
ye sham ghazab tanhai ki 
patjhad ki hawa barfili hai 
is sham ki rangat pili hai 
is sham faqat aawaz teri 
kuchh aise sunai deti hai 
aawaz dikhai deti hai 
ye aakhiri saat sham ki hai 
ye sham bhi tere nam ki hai 

اپنا تبصرہ بھیجیں