Ab Dekhai Nahi Deta Kahin Jata Howa Dil

Ab Dekhai Nahi Deta Kahin Jata Howa Dil

Ab Dekhai Nahi Deta Kahin Jata Howa Dil
Haye wo aik ke bad aik pe ata howa dil

Hisab-e-mahmol idher shaam hoi aur udher
Soye mehkhana chala nachta gaata howa dil

Kiya karen baith ke ham gosha-e-tanhai mein
Tang karta hai bohot shor machata howa dil

Kabhi shadaan kabhi gumgen nahi rehne deta
Yeh rolata howa dil aur hansta howa dil

Koi jane mein nahi tou koi kisi veerane mein
Phir raha hoga kahin thokaren khata howa dil

Sahib-e-zok ke seene mein dehkta hai sho’our
Sher parta howa afsane sunta howa dil

Ab dekhai nahi deta kahin jata howa dil
Haye wo aik ke bad aik pe ata howa dil
غزل
اب دکھائی نہیں دیتا کہیں جاتا ہوا دل
ہائے وہ ایک کے بعد ایک پہ آتا ہوا دل

حسب معمول اِدھر شام ہوئی اور اُدھر
سوئے میخانہ چلا ناچتا گاتا ہوا دل

کیا کریں بیٹھ کے ہم گوشہ تنہائی میں
تنگ کرتا ہے بہت شور مچاتا ہوا دل

کبھی شاداں کبھی غمگیں نہیں رہنے دیتا
یہ رولاتا ہوا دل اور ہنساتا ہوا دل

کوئی جانے میں نہیں تو کوئی کسی ویرانے میں
پھر رہا ہوگا کہیں ٹھوکریں کھاتا ہوا دل

صاحب زوق کے سینے مین دھڑکتا ہے شعوؔر
شعر پڑھتا ہوا افسانے سناتا ہوا دل

اب دکھائی نہیں دیتا کہیں جاتا ہوا دل
ہائے وہ ایک کے بعد ایک پہ آتا ہوا دل

اپنا تبصرہ بھیجیں