Yeh Din Raat Yeh Lamhe Mujhe Achhe Lagte Hain

Yeh Din Raat Yeh Lamhe Mujhe Achhe Lagte Hain

Yeh Din Raat Yeh Lamhe Mujhe Achhe Lagte Hain
Tumhein sochun to sare silsilay achhe lagte hain

Bohat dour tak chalna magar phir bhi wahin rehna
Mujhe tum se tumhi tak faasle achhe lagte hain

Mere dil mein dar-o-deewar par sare manzar mein
Tumhein tum ho mujhe sare aaine achhe lagte hain

Khafa hona ada se muskurana aur chup rehna
Mujhe husan ke yeh sab zawiye achhe lagte hain

Mujhe din raat kar lena achha nahi lagta bas
Khushi dukh sukh yeh sare marhale achhe lagte hain

Khud apni hi shararat se kabhi thak haar ke bache
Yunhi sar jhukaye sochhte achhe lagte hain

Bohat hi chhoti baaton peh kabhi be sakhta do dil
Bahut hi zoor se haste hoye bohat achhe lagte hain

Yeh din raat yeh lamhe mujhe achhe lagte hain
Tumhein sochun to sare silsilay achhe lagte hain
غزل
یہ دن یہ رات یہ لمحے مجھے اچھے لگتے ہیں
تمہیں سوچوں تو سارے سلسلے اچھے لگتے ہیں

بہت دور تک چلنا مگر پھر بھی وہیں رہنا
مجھے تم سے تمہیں تک فاصلے اچھے لگتے ہیں

میرے دل میں در و دیوار پر سارے منظر میں
تمہی تم ہو مجھے سارے آئنے اچھے لگتے ہیں

خفا ہونا ادا سے مسکرانا اور چپ رہنا
مجھے حسن کے یہ سب زاویے اچھے لگتے ہیں

مجھے دن رات کرلینا اچھا نہیں لگتا بس
خوشی دکھ سکھ یہ سارے مرحلے اچھے لگتے ہیں

خود اپنی ہی شرارت سے کبھی تھک ہار کے بچے
یوںہی سر کو جھکائے سوچتے اچھے لگتے ہیں

بہت ہی چھوٹی باتوں پہ کبھی بے ساختہ دو دل
بہت ہی زور سے ہسستے ہوئے بہت اچھے لگتے ہیں

یہ دن یہ رات یہ لمحے مجھے اچھے لگتے ہیں
تمہیں سوچوں تو سارے سلسلے اچھے لگتے ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں