Yaadein Pagal Kar Deti Hain| Noon Meem Danish

Yaadein Pagal Kar Deti Hain| Noon Meem Danish

Yaadein Pagal Kar Deti Hain
Baatein pagal kar deti hain

Chehra hosh urra deta hai
Aankhain pagal kar deti hain

Tanha chalne waloon ko yeh
Raahein pagal kar deti hain

Din tou khair guzar jata hai
Raatein pagal kar deti hain

Yaadein pagal kar deti hain
Baatein pagal kar deti hain
غزل
یادیں پاگل کر دیتی ہیں
باتیں پاگل کر دیتی ہیں

چہرہ ہوش اُڑا دیتا ہے
آنکھیں پاگل کر دیتی ہیں

تنہا چلنے والوں کو یہ
راہیں پاگل کر دیتی ہیں

دن تو خیر گزر جاتا ہے
راتیں پاگل کر دیتی ہیں

یادیں پاگل کر دیتی ہیں
باتیں پاگل کر دیتی ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں