Tera Khayal Bohat Dair Tak Nahi Rehta

Tera Khayal Bohat Dair Tak Nahi Rehta

Tera Khayal Bohat Dair Tak Nahi Rehta
Koi malal bohat dair tak nahi rehta

Udaas karti hai aksar tumhari yaad mujhe
Magar yeh hal bohat dair tak nahi rehta

Mein raiza raiza tou hota hoon har shikast ke baad
Magar nidhaal bohat dair tak nahi rehta

Jawab mil hi tou jata hai aik chup hi nah ho
Koi sawal bohat dair tak nahi rehta

Mein janta hoon keh soraaj hoon doob jawon bhi tou
Mujhe zawal bohat dair tak nahi rehta

Tera khayal bohat dair tak nahi rehta
Koi malal bohat dair tak nahi rehta
غزل
ترا خیال بہت دیر تک نہیں رہتا
کوئی ملال بہت دیر تک نہیں رہتا

اُداس کرتی ہے اکثر تمہاری یاد مجھے
مگر یہ حال بہت دیر تک نہیں رہتا

میں ریزہ ریزہ تو ہوتا ہوں ہر شکست کے بعد
مگر نڈھال بہت دیر تک نہیں رہتا

جواب مل ہی تو جاتا ہے ایک چپ ہی نہ ہو
کوئی سوال بہت دیر تک نہیں رہتا

میں جانتا ہوں کہ سورج ہوں ڈوب جاؤں بھی تو
مجھے زوال بہت دیر تک نہیں رہتا

ترا خیال بہت دیر تک نہیں رہتا
کوئی ملال بہت دیر تک نہیں رہتا

اپنا تبصرہ بھیجیں