Mein Ne Jo Rah Li Dushwaar Zyada Nikli

Mein Ne Jo Rah Li Dushwaar Zyada Nikli

Mein Ne Jo Rah Li Dushwaar Zyada Nikli
Mere andazay se har bar zyada nikli

Koi rozan nah jharoka nah koi darwaza
Meri tameer mein deewar zyada nikli

Yeh meri mout ke asbab mein likha ho ga
Khoon mein ishq ki miqdaar zyada nikli

Kitni jaldi diya ghar walun ko phal aur saya
Mujh se tu pair ki raftaar zyada nikli

Mein ne jo rah li dushwaar zyada nikli
Mere andazay se har bar zyada nikli
غزل
میں نے جو راہ لی دشوار زیادہ نکلی
میرے اندازے سے ہر بار زیادہ نکلی

کوئی روزن نہ جھروکا نہ کوئی دروازہ
میری تعمیر میں دیوار زیادہ نکلی

یہ مری موت کے اسباب میں لکھا ہو گا
خون میں عشق کی مقدار زیادہ نکلی

کتنی جلدی دیا گھر والوں کو پھل اور سایہ
مجھ سے تو پیڑ کی رفتار زیادہ نکلی

میں نے جو راہ لی دشوار زیادہ نکلی
میرے اندازے سے ہر بار زیادہ نکلی

اپنا تبصرہ بھیجیں