Maal-E-Jaan Nisar Shiddat-E-Gham Hai Jaha

Maal-E-Jaan Nisar Shiddat-E-Gham Hai Jaha

Maal-E-Jaan Nisar Shiddat-E-Gham Hai Jahan Tu Hai
Wahan ulfat nahi ulfat ka matam hai jahan tu hai

Qanaat ka phareyra hai yahan bam-e-aqeedat par
Wafa ki qabar par nafrat ka parcham hai jahan tu hai

Teri fitrat jawab-e-gham gusaari de nahi sakti
Chirag ehsas ka sene mein madhm hai jahan tu hai

Khuda ka khauf kar gharat gir jins-e-shikibai
Sukoon-e-ishq ka sheraza barhum hai jahan tu hai

Maal-e-jaan nisar shiddat-e-gham hai jahan tu hai
Wahan ulfat nahi ulfat ka matam hai jahan tu hai
غزل
مالِ جاں نثار شدتِ غم ہے جہاں تو ہے
وہاں الفت نہیں الفت کا ماتم ہے جہاں تو ہے

قناعت کا پھریرا ہے یہاں بامِ عقیدت پر
وفا کی قبر پر نفرت کا پرچم ہے جہاں تو ہے

تری فطرت جوابِ غمگساری دے نہیں سکتی
چراغ احساس کا سینے میں مدھم ہے جہاں تو ہے

خدا کا خوف کر غارت گر جنسِ شکیبائی
سکونِ عشق کا شیرازہ بر ہم ہے جہاں تو ہے

مالِ جاں نثار شدتِ غم ہے جہاں تو ہے
وہاں الفت نہیں الفت کا ماتم ہے جہاں تو ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں