Jo Mujhe Bhola Dain GayeMein Inhain

Jo Mujhe Bhola Dain Gaye

Jo Mujhe Bhola Dain Gaye Mein Inhain Bhola Du Ga
Sab garorin ka mein khak mein mila du ga

Dekhta hoon sab shaklain sun raha hoon sab baatein
Sab hisab in ka mein aik din chuka du ga
Roshni dekha du ga in indher nigron mein
Ek hava ziaon ki char so chala du ga
Be-misal qaryoun ke be kinar baghon ke
Apne khowab logo ke khowab mein dekha du ga
Mein munir jaun ga aik din usay milne
Es ke dar pe ja ke mein aik din sada du ga
Jo mujhe bhola dain gaye mein inhain bhola du ga
Sab garorin ka mein khak mein mila du ga
غزل
جو مجھے بھلا دیں گے میں انہیں بھلا دوں گا
سب غرور ان کا میں خاک میں ملا دوں گا
دیکھتا ہوں سب شکلیں سن رہا ہوں سب باتیں
سب حساب ان کا میں ایک دن چکا دوں گا
روشنی دکھا دوں گا ان اندھیر نگروں میں
اک ہوا ضیاؤں کی چار سو چلا دوں گا
بے مثال قریوں کے بے کنار باغوں کے
اپنے خواب لوگوں کے خواب میں دکھا دوں گا
میں منیرؔ جاؤں گا ایک دن اسے ملنے
اس کے در پہ جا کے میں ایک دن صدا دوں گا
جو مجھے بھلا دیں گے میں انہیں بھلا دوں گا
سب غرور ان کا میں خاک میں ملا دوں گا

اپنا تبصرہ بھیجیں