Humaray Sath Koi Masla Faraat Ka Hai

Ghazal
Humare Sath Koi Masla Faraat Ka Hai
Wagarna ilm usay apni mushklat ka hai

Mere hisab se mazori hussan hai mera
Agar yeh aibe hai tou bhi khuda ke hath ka hai

Ham us ke hone ya na hone pe kitna lar rahe hain
Kisi ke waste yeh khel nafsiyat ka hai

Tum us pe kyu nai baato ka bojh daltay ho
Jab aik shakhs porane moamlat ka hai

Humare Sath Koi Masla Faraat Ka Hai
Wagarna ilm usay apni mushklat ka hai
غزل
ہمارے ساتھ کوئی مسئلہ فراعت کا ہے
وگرنا علم اُسے اپنی مشکلات کا ہے

میرے حساب سے معزوری حسن ہے میرا
اگر یہ عیب ہے تو بھی خدا کے ہاتھ کا ہے

ہم اُس کے ہونے نہ ہونے پر کتنا لڑ رہے ہیں
کسی کے واسطے یہ کھیل نفسیات کا ہے

تم اُس پہ کیوں نئی باتوں کا بوجھ ڈالتے ہو
جب ایک شخص پرانے معملات کا ہے

ہمارے ساتھ کوئی مسئلہ فراعت کا ہے
وگرنا علم اُسے اپنی مشکلات کا ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں