Daman Chhura Ke Aaya Hai Dil Teri Yaad Ka

Daman Chhura Ke Aaya Hai Dil Teri Yaad Ka

Daman Chhura Ke Aaya Hai Dil Teri Yaad Ka
Pehla samjh yeh vote adam aitmaad ka

Mein hoon keh jis ne bakhshi hai tauqeer tujh ko ishq
Mushkil lage ga waqt tujhe mere baad ka

To shar mein aa gaya hai kisi bad khayal ke
Tou aadmi nahi hai buray aitqaad ka

Kuch aisi sard guftagu thi yun laga hai aaj
Darja gira ho jaisay kahin injmaad ka

Parion ki khobroi bhi murjha gai tamam
Qabza hai koh-e-qaaf peh ik dev zaad ka

Shakh shajar to phir nikal aaye gi par mujhe
Dukh hai parindagan-e-shajar se inaad ka

Woh shakhs jis ne roz hi tehqeer ki meri
Uss ke labon peh zikar haqooq ul ibaad ka

Mujh ko sukhan ki taigh nahi be sabab mili
Mujh ko mila hai azan qalam se jihad ka

Daman chhura ke aaya hai dil teri yad ka
Pehla samjh yeh vote adam aitmaad ka
غزل
دامن چھڑا کے آیا ہے دل تیری یاد کا
پہلا سمجھ یہ ووٹ عدم اعتماد کا

میں ہوں کہ جس نے بخشی ہے توقیر تجھ کو عشق
مشکل لگے گا وقت تجھے میرے بعد کا

تو شر میں آگیا ہے کسی بد خیال کے
تو آدمی نہیں ہے برے اعتقاد کا

کچھ ایسی سرد گفتگو تھی یوں لگا ہے آج
درجہ گرا ہو جیسے کہیں اِنجماد کا

پریوں کی خوبروئی بھی مرجھا گئی تمام
قبضہ ہے کوہ قاف پہ اک دیو ذاد کا

شاخ شجر تو پھر نکل آئے گی ، پر مجھے
دکھ ہے پرندگانِ شجر سے عناد کا

وہ شخص جس نے روز ہی تحقیر کی مری
اُس کے لبوں پہ ذکر حقوق العباد کا

مجھ کو سخن کی تیغ نہیں بے سبب ملی
مجھ کو ملا ہے اذن، قلم سے جہاد کا

دامن چھڑا کے آیا ہے دل تیری یاد کا
پہلا سمجھ یہ ووٹ عدم اعتماد کا
Poet: Komal Joya

اپنا تبصرہ بھیجیں