Abar-E-Bahar Shaam Tamna Bhi Khawab Hai

Abar-E-Bahar Shaam Tamna Bhi Khawab Hai

Abar-E-Bahar Shaam Tamna Bhi Khawab Hai
Yeh intazar hassan dulara bhi khawab hai

Hain khowab qisa hye firaq-o-wisal sab
Mere aur us ke khowab ka fasana bhi khawab hai

Guzray howay zaman-o-makan jaise khawab thay
Saher khayal eshrat-e-fard bhi khawab hai

Milta hoon rooz es se isi sheher mein munir
Per janta hoon wo bot ziban bhi khawab hai

Abar-e-bahar shaam tamna bhi khawab hai
Yeh intazar hassan dulara bhi khawab hai
غزل
ابر بہار شام تمنا بھی خواب ہے
یہ انتظار حسن دُلارا بھی خواب ہے

ہیں خواب قصہ ہائے فراق و وصال سب
میرے اور اُس کے خواب کا فسانہ بھی خواب ہے

گزرے ہوئے زمان و مکاں جیسے خواب تھے
سحرِ خیال عشرت فراد بھی خواب ہے

ملتا ہوں روز اس سے اسی شہر میں منیرؔ
پر جانتا ہوں وہ بت زیباں بھی خواب ہے

ابر بہار شام تمنا بھی خواب ہے
یہ انتظار حسن دُلارا بھی خواب ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں